نیویارک میں نائن الیون حملوں کے ٹھیک 20 سال بعد گراؤنڈ زیروپر یادگاری تقریب

امارت اسلاميہ کے وزيراعظم ملا محمد حسن اخوند کا کہنا ہے کہ کوئی يہ ثابت نہيں کرسکتا کہ امارت اسلاميہ نے پرانے مظالم پرکسی کو قتل يا قيد کيا ہو۔

الجزيرہ کو انٹرويو ميں ملا محمد حسن اخوند کا کہنا تھا کہ جن لوگوں نے ہم پرظلم کيا عقوبت خانوں ميں برسوں قيد رکھا ہم نے اُن سب کو معاف کرديا۔ ملا محمد حسن اخوند کا کہنا تھا کہ يہ ثابت کرتا ہے کہ ہم سب کو ساتھ لے کر چلنا چاہتے ہيں۔ ملا محمد حسن اخوند کا کہنا تھا کہ تمام مسلمان، بالخصوص افغانستان کےعوام مطمئن رہيں ،ہم امن، خوشحالی اور اسلامی و شرعی نظام کی حاکميت کے ليے تمام لوگوں کو ساتھ لے کر چليں گے۔ دوسری جانب امريکا نے سہولت سے انخلا پراطمينان کا اظہار کيا ہے نمائندہ خصوصی زلمے خليل زاد نے ٹويٹ کيا ہے کہ گزشتہ تين روز ميں 250 غيرملکيوں کا کابل سے انخلا ہوا ہے جن ميں امريکی شہری بھی شامل ہيں۔

Share This:

Be the first to comment on "نیویارک میں نائن الیون حملوں کے ٹھیک 20 سال بعد گراؤنڈ زیروپر یادگاری تقریب"

Leave a comment

Your email address will not be published.


*