مسئلہ کشمیر، ایک ٹِک ٹِک کرتا ایٹم بم

مسئلہ کشمیر، ایک ٹِک ٹِک کرتا ایٹم بم

(ڈاکٹر شاہد مسعود)

 Related image

پاکستان میں موجود بدمعاشیہ نے بدترین سفارتی محاذ پر کشمیر کا مسئلہ اٹھایا ہے۔ انتہائی افسوس کی بات ہے کہ ہماری بدمعاشیہ نے  یومِ یکجہتی کشمیر  جیسے دن پر بھی سیاست کرنا نہیں چھوڑی۔ بھارت اور دنیا کوسمجھنا ہو گا کہ مسئلہ کشمیر ایک ٹِک ٹِک کرتا ایٹم بم ہے۔ کشمیر میں جو مظالم ہو رہے ہیں اس سے انسانیت شرماتی ہے۔ بھارت میں کشمیر پر جو بات کرتا ہے اسے دشمن کا ایجنٹ قرار دے دیا جاتا ہے۔ پاکستان کی کشمیر کمیٹی چھتیس (36) کروڑ کھا گئی جس کا کسی کو پتہ ہی نہیں ہے۔

نوازشریف کو ایک بات سمجھنی چاہئیے کہ اگر وہ ملک کو تصادم کی طرف لے کر جاتے ہیں تو  ملک تصادم کی طرف نہیں جائے گا۔ لوگ اب ہوا کا رخ دیکھ لیتے ہیں۔نوازشریف چاہتے ہیں  کہ انہیں ووٹ ملیں تاکہ وہ عدالت کے پر کاٹ دیں۔ وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کہہ رہے ہیں کہ  طلال چوہدری کو معافی مانگ لینی چاہئیے جبکہ نوازشریف کہہ رہے ہیں کہ توہین عدالت سے جیلیں بھر دیں گے۔ نوازشریف کی جو سیٹیں پنجاب میں ہیں وہ انہیں ملیں گی لیکن نوازشریف اس بات سے بھی خوش نہیں۔ اسحاق ڈار کہتے ہیں کہ اگر مجھے سینیٹ کا ٹکٹ نہ ملا تو وعدہ معاف گواہ بن جاؤں گا۔

اگر کسی مرحلے پر پتہ چل گیا کہ وکیلوں نے جعلی قطری خط بنوایا  تو ان کے لائسنس کینسل ہو جائیں گے۔

Share This:

Be the first to comment on "مسئلہ کشمیر، ایک ٹِک ٹِک کرتا ایٹم بم"

Leave a comment

Your email address will not be published.


*